03

آخر کس طرح حسد کی آگ انسان کو جلا دیتی ہے؟

آخر کس طرح حسد کی آگ انسان کو جلا دیتی ہے؟

(پرائم نیوز) اس حسد کا دائرہ کار معمولی اشیاء سے لیکر خداداد صلاحیتوں تک پھیلا ہوا ہے۔ مثلاً کچھ حاسد قسم کے افراد اپنے ہی دوستوں اور رشتہ داروں سے اُن کے بہترین پہناوے کی وجہ سے احساس کمتری میں مبتلا ہوجاتے ہیں۔ وہ سوچتے ہیں کہ اُن سے اچھا لباس کوئی کیسے پہن سکتا ہے؟ یا اُن سے اچھا کوئی کیسے لگ سکتا ہے؟ جبکہ اس اچھا لگنے میں اللہ کی دی ہوئی شکل و صورت کا سب سے بڑھ کر عمل دخل ہوتا ہے،

اور اُس بے چارے کا اختیار محض اپنی پسند کا لباس زیب تن کرنے کی حد تک ہوتا ہے۔ اِس بات میں کوئی شک نہیں کہ بہترین لباس اور تیاری سے جلنے اور جلانے والوں میں زیادہ تعداد خواتین کی ہی ہوتی ہے۔ خوبصورت لگنا اور سب سے منفرد لباس زیب تن کرنا ہر خاتون کی دکھتی رگ ہوتی ہے، اور جو کوئی غلطی سے بھی اِس دکھتی رگ کو چھیڑنے کا مرتکب ہو وہ اُن کی ناپسندیدہ افراد کی فہرست میں آجاتا ہے اور وہ نہ چاہتے ہوئے بھی ہر محفل میں اُس کا خود سے موازنہ کرکے حسد کی آگ کو بڑھاوا دیتی رہتی ہیں.

loading...

اپنا تبصرہ بھیجیں