1

پاکستانی مارکیٹ میں بکنے والے کوکنگ آئلز میں کون کونسی چیزیں استعمال کی جا رہی ہیں؟ کون کون سے برانڈز آپ کیلئے خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں؟

پاکستانی مارکیٹ میں بکنے والے کوکنگ آئلز میں کون کونسی چیزیں استعمال کی جا رہی ہیں؟ کون کون سے برانڈز آپ کیلئے خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں؟

اسلام آباد (پرائم نیوز) پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے کئے گئے خوردونی تیل کے 71 نمونوں میں سے 42 کو مضر صحت قرار دیا گیا ہے. تفصیلات کے مطابق لاہور میں پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے اشیائے خوردونوش کی مرحلہ اور چیکنگ کا سلسلہ جاری ہے اور اسی سلسلے میں خوردنی تیل کے 71 سیمپلز لیبارٹری ٹیسٹ کیلئے بھیجے گئے جس میں‌ 42 مضر صحت قرار دے دیئے گئے. ان برانڈز کے گھی اور کوکنگ آئل اس لیے ناموزوں ہیں کیونکہ ان میں وٹامن اے موجود نہیں‌ ہوتا اور مصنوعی فلیور سمیت تیزابی ویلیو اور بدبو بھی موجود ہوتی ہے.

خوردنی تیل میں انتہائی مہلک کیمیکلز کا استعمال کیا جا رہا ہے. جن کمپنیوں کے کوکنگ آئل مضر صحت قرار دیے گئے ہیں ان میں کئی معروف کمپنیاں شامل ہیں. پنجاب فوڈ اتھارٹی کی طرف سے جاری پبلک نوٹس میں کہا گیا ہے کہ شان کوکنگ آئل، شان بناسپتی، سویا سپریم کوکنگ آئل، تلو بناسپتی، تلو کوکنگ آئل، سویا سپریم بناسپتی، کسان ویجیٹیبل گھی، سمارٹ کینولا کوکنگ آئل اور غنی کوکنگ آئل سمیت مزید برانڈز انسانی صحت کیلئے انتہائی مضر ہیں اور عوام انہیں استعمال کرنے سے گریز کرے.

اپنا تبصرہ بھیجیں