04

پاکستان کی تاریخ کا سنہر ی دن ، شاندار اعلان ہو گیا

پاکستان کی تاریخ کا سنہر ی دن ، شاندار اعلان ہو گیا

اسلام آباد (پرائم نیوز) وزیر اعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ انشاءاللہ لوڈ شیڈنگ ماضی کا قصہ بن کر رہ جائے گا، پچھلے 20 سالوں میں توانائی کے نئے منصوبوں کا آغاز نہیں ہوا، حکومت پہلے ہی سے بجلی کے بحران کو ختم کرنے کیلئے اپنی کوششوں میں مصروف ہے، خوشی کی بات یہ ہے کہ ہم سیدھی راہ پر گامزن ہیں، مستقبل کی نسلوں کیلئے بلا معطل بجلی کی فراہمی کو یقینی بنانا چاہتے ہیں، بجلی کی فراہمی کیلئے ماضی کی حکومتوں نے فرائض ادا نہیں کئے. 2017 اور مارچ 2018 کے درمیان توانائی منصوبوں سے حاصل بجلی نظام میں شامل ہو گی.

منگل کے روز وزیراعظم نواز شریف کی زیر صدارت کابینہ کی توانائی کمیٹی کا اجلاس ہوا، اجلاس میں جاری توانائی منصوبوں کی مقررہ مدت میں تکمیل کے امور کا جائزہ لیا گیا، اجلاس مین بتایا گیا پانی ، کوئلے اور گیس سے چلنے والے بجلی کے گھروں کی تکمیل سے خاطر خواہ نظام میں شامل ہو گی. اجلاس میں مستقبل کے توانائی منصوبوں پر بھی غور کیاگیا، اجلاس میں نئی ٹرانسمیشن لائنز بچھانے کے حوالے سے بھی امور زیر بحث لائے گئے. اجلاس کو بریفنگ دی گئی کہ بجلی کی تقسیم کے نطام میں رکاوٹوں کو ختم کیا جا رہا ہے. صارفین کو بجلی کی بلا معطل فراہمی یقینی بنائے جا رہی ہے. وزیر اعظم نے اجلاس میں وزارت پانی و بجلی کی بہترین کارکردگی پر تعریف کی. وزیر اعظم کا کہنا ہے کہ 2018 کے آخر میں مہنگی بجلی پر انحصار کم ہو جائے گا، اقتدار سنبھالا تو حکومت کو بجلی کا شدید بحران کا سامنا تھا، آج توانائی کی صورتحال نمایاں طور پر بہتر ہے، صنعتوں کیلئے لوڈ شیڈنگ زیرو ہے. دیہی اور شہری علاقوں میں لوڈ شیڈنگ میں کمی آئی ہے، توانائی کے شعبے میں اصلاحات کے مثبت نتائج حاصل ہو رہے ہیں. اضافی بجلی پیدا کرنے سے ملک میں مستقبل کی ضروریات پوری ہوں گی. موجودہ حکومت کے اقدامات کو دنیا بھر میں پذیرائی حاصل ہو رہی ہے. وزیر اعظم نے کہا کہ ماضی کی حکومتوں نے بجلی کی فراہمی کیلئے فرائض سر انجام نہیں دیے. سیکرٹری پانی و بجلی نے اجلاس کو توانائی کی صورتحال پر بریفنگ دیتے ہوئے بتایاکہ گردشی قرضے ختم اور وصولیاں اطمینان بخش ہیں. لائن لاسز کم کئے گئے ہیں. تقسیم و ترسیل کے منصوبوں پر کام کیا جا رہا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں