09

اس نوجوان نے گردن کٹوا دی مگر کلمہ توحید کو چھوڑنے سے انکار کر دیا ، لیکن اس کا تعلق کس ملک سے ہےجان کر آپ بھی داد دیں گے

اس نوجوان نے گردن کٹوا دی مگر کلمہ توحید کو چھوڑنے سے انکار کر دیا ، لیکن اس کا تعلق کس ملک سے ہےجان کر آپ بھی داد دیں گے

نئی دہلی (پرائم نیوز) بھارت میں ایک نومسلم نوجوان کو بے دردی سے قتل کر دیا گیا.یہ نوجوان گزشتہ کئی ماہ سے نوکری کے سلسلے میں سعودی عرب میں مقیم تھا جہاں اس نے مسلمانوں کی تعلیمات سے متاثر ہو کر اسلام قبول کر لیا تھا۔ قتل ہونے والے نوجوان کا نام انیل کمار تھا تاہم مسلمان ہونے کے بعد اس نے اپنا نام تبدیل کرکے فیصل رکھ لیا تھا.غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق فیصل نامی اس نوجوان کا تعلق بھارتی ریاست کیرالہ سے تھااور وہ رواں سال اگست میں چھٹیوں پر وطن واپس آیا تھا۔ تاہم واپس آتے ہی جب ہندو انتہاء پسندوں کو اس کے اسلام لانے کی خبر ملی تو انہوں نے اسے قتل کرنے کی دھمکیاں دینا شروع کر دیں۔ فیصل نے اس سلسلے میں مقامی عالم دین سے ملاقات کی جنہوں نے اسے اپنی کمیونٹی سے مدد حاصل کرنے کا مشورہ دیا۔ تاہم سینے میں اسلام کی شمع جلنے کے بعد فیصل کی تو جیسےکایا ہی پلٹ گئی تھی۔ اس نے عالم دین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ واحد لاشریک پر ایمان لانے کے بعد اس کو کسی چیز کا خوف ہے اور ہی ڈر، وہ ہر خطے سے بے پرواہ ہو چکا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں