1

حکومت کو سب سے بڑا دھچکا… سپریم کورٹ نے ایک نہ سنی.. بڑے فیصلے کا اعلان کر دیا

حکومت کو سب سے بڑا دھچکا… سپریم کورٹ نے ایک نہ سنی.. بڑے فیصلے کا اعلان کر دیا

اسلام آباد (پرائم نیوز) سپریم کورٹ آف پاکستان نے مارچ یا اپریل میں مردم شماری کرانے کی مشروط تاریخ مسترد کرتے ہوئے کہا کہ حکومت مردم شماری کرانے کی واضح تاریخ دے، حکومت کی طرف سے دی گئی تاریخ صرف دکھاوا ہے. حکومت نے تاریخ کو فوج کی دستیابی سے مشروط کر دیا ہے. جمعہ کو مردم شماری از خود نوٹس کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس آف پاکستان کا کہنا ہے کہ مردم شماری کیلئے اس قسم کی یقین دہائی قابل قبول نہیں.

ادارہ شماریات مردم شماری نہیں کرا سکتا تو بند کر دیں تا کہ لوگ بے وقوف نہ بنیں اور نہ پیسہ ضائع ہو. ان کا کہنا ہے کہ سارے کام فوج نے کرتے ہیں تو باقی اداروں کی کیا ضرورت ہے. کہہ دیں کہ مردم شماری کرانا حکومت کے بس کی بات نہیں اگر ہمارے فیصلوں پر عمل نہیں کرنا تو سپریم کورٹ کو بھی بند کر دیں حکومت کہہ دے کہ سپریم کورٹ کی ضرورت نہیں ہے. اس موقع پر اٹارنی جنرل نے کہا کہ فوج بھی ریاست کا ادارہ ہے حکومت مارچ یا اپریل میں مردم شماری کرانے کو تیار ہے. عدالت نے از خود نوٹس پر سماعت یکم دسمبر تک ملتوی کر دی ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں