1

ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر منتخب ہوتے ہی امریکی جنرل کا بڑا اقدام، اہم فیصلہ کر لیا گیا

ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر منتخب ہوتے ہی امریکی جنرل کا بڑا اقدام، اہم فیصلہ کر لیا گیا

برلن ( پرائم نیوز) افغانستان میں نیٹو کے کمانڈر جان نکلسن کا کہنا ہے کہ انہیں اپنا مشن جاری رکھنے کیلئے اگلے سال بھی کم از کم 12 ہزار فوجیوں کی ضرورت ہے لیکن کیا ڈونلڈ ٹرمپ ان کا یہ مطالبہ پورا کریں‌ گے؟

میڈیا رپورٹس کے مطابق افغانستان میں مغربی دفاعی اتحاد نیٹو کے امریکی کمانڈر جنرل جان نکلسن ایک (فوجی مشیر) ہیں اور واشنگٹن کی نئی قیادت کو وہ صرف اپنی خواہشات اور مطالبات سے ہی آگاہ کر سکتے ہیں. جرمن دارلحکومت برلن میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہا ہے کہ کامیابی کیلئے یہ انتہائی ضروری ہے کہ موجودہ اسٹریٹیجی کو جاری رکھا جائے. جان نکلسن کے مطابق ان کی اسی حکمت عملی کے باعث اس سال طالبان کسی بھی شہر پر قبضہ کرنے میں ناکام رہے ہیں.

دوسری طرف اسی حکمت عملی کی وجہ سے طالبان جنوب میں لشکر ہوگا، وسط میں ترین کوٹ اور شمال میں قندوز تک جا پہنچے ہیں اور ان شہروں پر قبضے کی لڑائی جاری ہے. دیہاتوں میں چیک پوسٹیں ختم کرنے کی وجہ سے طالبان شہروں کی سرحدوں تک پہنچنے میں کامیاب ہو گئے ہیں اور ان کے زیر کنٹرول علاقوں کی تعداد 2001 کے بعد اس وقت سب سے زیادہ ہے. تاہم جان نکلسن نے یہ بھی اعلان کیا ہے کہ طالبان کے ساتھ مذاکرات ضروری ہیں. انہیں امید ہے کہ طالبان کےکچھ گروپ مذاکرات مخالف طالبان سے علیحدہ ہو سکتے ہیں، لیکن کیا طالبان کے ایسے گروپوں کو واشنگٹن کی حمایت حاصل ہو گی، یہ ابھی واضح نہ ہو سکا.

اپنا تبصرہ بھیجیں