1

ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر منتخب ہونے سے مسلمانوں کو کتنے بڑے نقصان کا سامنا کرنا پڑے گا؟ تہلکہ خیز رپورٹ منظر عام پر

ڈونلڈ ٹرمپ کے صدر منتخب ہونے سے مسلمانوں کو کتنے بڑے نقصان کا سامنا کرنا پڑے گا؟ تہلکہ خیز رپورٹ منظر عام پر

اسلام آباد ( پرائم نیوز) ہیلری کلنٹن سے فتح حاصل کرنے کے بعد دنیا کے طاقتور ترین ملک امریکہ کے صدر بننے والے ڈونلڈ ٹرمپ 14 جون 1946 کو نیویارک میں پیدا ہوئے. انہوں نے 1968 میں یونیورسٹی آف پینسلوانیا سے اکنامکس میں گریجویشن کیا. 1971 میں والد فریڈ ٹرمپ کی رئیل اسٹیٹ اور کنسٹرکشن کمپنی کاکنٹرول اپنے ذمہ لیا جس کا نام بعد میں تبدیل کر کے دی ٹرمپ آف آرگنائزیشن رکھا گیا. ڈونلڈ ٹرمپ دی ٹرمپ آف آرگنائزیشن کے صدر اور چیئرمین ہیں، ڈونلڈ ٹرمپ کی ذاتی دولت کا اندازہ 4 ارب ڈالرز تک لگایا گیا ہے. دیگر کمپنیوں کے تعمیراتی منصوبوں کی اشتہاری مہم میں اپنا نام بطور فرنچائز استعمال کرنے کا معاوضہ بھی لیتے رہے ہیں. انہوں نے 1988، 2004 اور 2012 میں صدارتی دوڑمیں شرکت کی. یونیورس اورمس یو ایس اے مقابلے بھی منعقد کروائے. ڈونلڈ ٹرمپ خواتین سے متعلق نازیبا بات چیت کی وجہ سےخبروں میں رہے.

خیال رہے کہ ٹرمپ اسلام کے خلاف ذہنیت کسی سے ڈھکی چھپی نہیں. ایک بار نہیں کئی بار ٹرمپ کھل کر سامنے آئے ہیں اور مسلمانوں کوبری طرح ذلیل کیا. کبھی اپنے جلسوں میں نقاب پوش خواتین کو نکالا گیا تو کبھی صدر بننے کے بعد امریکہ میں موجود مساجد کو بندکرنے کا اعلان کیا. ٹرمپ کی ذہنیت کے مطابق دنیا میں کہیں بھی ہونے والی دہشت گردی کا تعلق صرف اور صرف اسلام اور مسلمانوں سے ہی ہو سکتا ہے. موجودہ صدر کا کہنا ہے کہ میں صدر بننے کے بعد مسلمانوں پر حتمی المقدور رکاوٹیں پیدا کروں گا. بین الاقوامی سیاست پر گہری نظر رکھنے والوں کے مطابق پوری دنیا پر اثر انداد ہونے والے امریکہ کے موجودہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ مسلمانوں کیلئے خطرناک ثابت ہو سکتے ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں