1

”صرف وزیراعظم سے نہیں بلکہ“ پانامہ لیکس میں چیف جسٹس نے ایسا اعلان کردیا کہ سب کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

”صرف وزیراعظم سے نہیں بلکہ“ پانامہ لیکس میں چیف جسٹس نے ایسا اعلان کردیا کہ سب کی آنکھیں کھلی کی کھلی رہ گئیں

اسلام آباد ( پرائم نیوز) سپریم کورٹ میں پانامہ لیکس کیس کی سماعت کا آغاز ہو گیا ہے. کیس کی سماعت کے موقع پر اظہار خیال کرتے ہوئے چیف جسٹس انور ظہیر جمالی کا کہنا ہے کہ اس کیس میں آنے والی تمام درخواستیں سنی جائیں‌ گی. جو فریق بھی مخالف میں درخواست دینا چاہے دے سکتا ہے. ان کا کہنا ہے کہ کڑوی گولی نگلی ہے. جو کام کر رہے ہیں وہ ہمارا نہیں. تحقیقات سب کی ہوں گی. ہم یہاں بادشاہ نہیں بنے بیٹھے کہ جو جی میں آئے کریں. ہم نے آئین اور قانون کے تحت ہی سب کچھ کرنا ہے. عدالتی کاروائی کے ذریعے کسی کا بھی استحقاق مجروح نہیں ہوگا.

ان کا مزید کہنا ہے کہ اگر آپ کی درخواست پر جائیں تو یہ 20 سالہ منصوبہ ہو جائے گا. اسلامی ریاست کی بات کرتے ہو تو حضرت عمر کی بات کرو جو لباس پر جواب دہ ہوئے. آج صورتحال یہ ہے کہ وزیر اعظم نے خود کو پیش کیا. یہ ہرگز نہیں کہ ہم باقیوں کو بری کر دیں گے. کسی کے ساتھ امتیاز نہیں ہو گا سب اس کی لپیٹ میں آئیں گے. چیف جسٹس کا کہنا ہے کہ ملک کو انتشار اور بحران سے محفوظ رکھنے کیلئے مرضی سے کاروائی چلانے دیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں