train

تجربہ کار ہونے کے باوجود سگنل کیوں توڑا اورپہلے سے کھڑی ٹرین میں اپنی ٹرین کیوں ٹکرادی؟خواجہ سعد رفیق کا بڑا انکشاف

تجربہ کار ہونے کے باوجود سگنل کیوں توڑا اورپہلے سے کھڑی ٹرین میں اپنی ٹرین کیوں ٹکرادی؟خواجہ سعد رفیق کا بڑا انکشاف

اسلام آباد (پرائم نیوز)ریلوے کے وزیر خواجہ سعد رفیق نے کراچی میں ہونےوالے جانی نقصان پر اظیار افسوس کیا اور کہا کہ ہم فوت شدگان کے اہل خانہ کے دکھ میں برابر کے شریک ہیں.جبکہ کچھ غیر زمہ دار یہلکاروں کی وجہ سے قیمتی جانیں ضائع ہورہی ہیں اور ادارے کی بدنامی بھی ہو رہی ہے.ان کا کہنا تھا کہ حادثے والی جگہ پر آپریشن مکمل ہونے والا ہے.

وفاقی وزیر خواجہ سعد رفیق نے حادثے کےمتعلق تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ ڈرائیور نے ریڈسگنل پر رکنے کی بجائےپہلسے کھڑی فریدایکسپریس میں دے مارا.اور ڈرایئور اور اسٹنٹ ڈرائیور ابھی تک لاپتہ ہیں.حالانکہ ڈرائیور تجربہ کار تھا اسکےباوجود اس نے ریڈ سگنل کو کیوں نہیں دیکھا اور اس پر رکا کیوں نہیں،اسکا جلد پتا لگا لیا جائے گا.ان کا مذید کہنا تھا کہ حادثے کی ابتدائی تحقیقات72 گھنٹوں میں اور تفصیلی کام 8 دنوں میں مکمل کرلیا جائے گا.اور ایک طرف سے ریلوے ٹریک جلد ٹھیک کرلیا جائے گا.ان کا کہنا تھا کی کراچی کے اس سانحے سے پوراشہر غم میں ڈوب گیا ہےانسانی جانوں کے نقصان کی بھرائی ممکن نہیں انہوں نے کہا کہ حادثے میں شہید ہونے والے لواحقین کو 15لاکھ اورزخمیوں کو ساڑھے 3لاکھ روپے دیے جائیں گے.اور اس حادثے کے زمہ داروں کو سزاضرور دے جائے گی.سعدرفیقنے کہا کہ گزشتہ حادثے کے زمہ داران کو معطل کر دیا گیا تھا اور ان پر قانونی کاروائی بھی جاری ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں