1

مکہ مکرمہ پر میزائل حملہ کس ایرانی شخصیت کے حکم پر کیا گیا؟ ایران کی ہی اہم رہنما کے بیان نے ہنگامہ برپا کر دیا

مکہ مکرمہ پر میزائل حملہ کس ایرانی شخصیت کے حکم پر کیا گیا؟ ایران کی ہی اہم رہنما کے بیان نے ہنگامہ برپا کر دیا

اسلام آباد ( پرائم نیوز) ایران کی پوزیشن کی جلا وطن رہ نما اور قومی مزاحمتی کونسل کی چیئر مین پرسن مریم رجوی نے یمن کے حوثی باغیوں کی جانب سے مکہ مکرمہ پر میزائل حملے کی کوشش کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ ایران نواز حوثیوں نے میزائل حملہ ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کے حکم پر کیا ہے. عرب ٹی وی کے مطابق اپنے ایک بیان میں مریم رجوی کا کہنا ہے کہ یمن سے مکہ کی جانب القدس فورس نامی تنظیم کی نگرانی میں داغا گیا جسے براہ راست ایران کی سرپرستی حاصل ہے . انہوں نے مکہ مکرمہ پر میزائل حملے کو عالم اسلام کے خلاف اعلان جنگ قرار دیا گیا ہے.

مریم رجوی نے اپنے بیان میں ایرانی رجیم کو ایک بار پھر مسترد کر دیا. ان کا کہنا ہے کہ ایران میں مسلط نظام نہ تو انسانی ہے اور نہ ہی اسلامی ہے. ایران کو اسلامی تعاون تنظیم کی رکنیت سے باہر نکال باہر کیا جائے اور پوری اسلامی دنیا ایران کے بائیکاٹ کا اعلان کر دے. اپوزیشن رہ نما نے کہا ہے کہ ایران ماضی میں بھی بیت اللہ اور مسجد حرام کے خلاف سازشوں کا مرتکب ہوتا رہا ہے. 1986ء4 میں ایران نے مکہ مکرمہ میں دہشت گردی کیلئے دھماکہ خیز مواد وہاں پہنچایا اور 1987ء4 میں حج کے موقع پر بگدڑ کی سازش بھی ایران کی طرف سے کی گئی تھی جس میں 400 حجاج شہید ہوئے تھے.

واضح رہے کہ سعودی محکمہ دفاع کے میزائل شکن نظام نے فضاء4 ہی میں مار گرایا. اس میزائل حملے پر عالم اسلام کی جانب سے شدید رد عمل دیکھنے کو ملا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں