1

ناقص میٹریل کے استعمال کے باعث میٹرو بس کا پلر گر گیا، بڑا نقصان ہو گیا

ناقص میٹریل کے استعمال کے باعث میٹرو بس کا پلر گر گیا، بڑا نقصان ہو گیا

ملتان ( پرائم نیوز) ملتان میں اربوں روپے کی لاگت سے زیر تعمیر میٹرو بس پروجیکٹ کا چونگی نمبر 6 پر واقع ایک پلر ناقص میٹریل کے باعث سے لفٹر کے ٹکرانے سے ٹوٹ گیا جس پر میٹرو حکام نے اپنے کرپشن کوچھپانے کیلئے پلر کے چاروں طرف دیوار کھڑی کر کے اس کو چھپا دیا ہے. جو کسی بھی وقت بڑے حادثے کی وجہ بن سکتا ہے.

دوسری طرف ملتان میٹرو بس پراجیکٹ کے اسٹیشنز پر برقی زینے ( ایسکالیٹ) لگا دیے گئے ہیں. پراجیکٹ مینجر شینڈلر محمد فرقان کا کہنا ہے کہ یہ ٹیکنالوجی کے اعتبار سے جدید ترین برقی زینے ہیں جو کہ یورپ سے منگوائے کیے گئے ہیں. ہر برقی زینے میں ایک گھنٹے میں 10 ہزار افراد کو بس اسٹیشن کی برج تک پہنچانے کی استعداد موجود ہے. ایوان صدر وزیر اعظم سیکرٹریٹ، پارلیمنٹ اور پاکستان کی بڑی نجی عمارتوں کے علاوہ فرانس کی سب سے بلند عمارت میں بھی اسی ادارے کے برقی زینے نصب کئے گئے ہیں. یہ بات پراجیکٹ مینجر شینڈلر (Schindler) محمد فرقان نے میٹرو بس اسٹیشنز پر لگنے والے برقی زینوں سے متعلق بریفننگ دیتے ہوئے بتائی ہے. ان کا مزید کہنا ہے کہ میٹرو اسٹیشن بی سی جی چوک پر پانچ چونگی نمبر 9 پرچار جبکہ دیگر میٹرو اسٹیشنز پر تین تین برقی زینے لگانے کی منصوبہ بندی کی گئی ہے. میٹرو بس اسٹیشن بی سی جی چوک، چونگی نمبر 6 اور نشیمن کالونی کے علاوہ باقی تمام اسٹیشنز پر برقی زینے لگا دیے گئے ہیں. میٹرو بس اسٹیشن چونگی نمبر9 پر2 برقی زینے لگا دیے گئے جبکہ 2 مزید نصب کئے جائیں گے. انہوں نے کہا ہے کہ برقی زینوں کی تنصیب کنٹرول یونٹ کمیونیکیشن اور ٹیکسٹنگ کے بعد انہی میٹرو انتظامیہ کے حوالے سے کیا جائے گا.

محمد فرقان کا کہنا ہے کہ ہر برقی زینے پر سینسر لگایا گیا ہے اور کسی رکاوٹ یا خاتون کو ڈوپٹہ الجھنے پر یہ آٹو میٹک رک جائے گا. انہوں نے کہا ہے کہ برقی زینے میں صفائی کیلئے آٹو میٹک سسٹم اور مشینوں کی حفاظت کیلئے آٹو لبریکیشن سسٹم لگایا گیا ہے. یہ سسٹم لاہور میٹرو بس اسٹیشنز پر لگائے برقی زینوں میں نہیں ہے وہاں یہ کام مینول طریقے سے سر انجام دیے جاتے ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں