1

منی لانڈرنگ کیس تو ہوا ختم، ایم کیو ایم پر نئی قیامت پھوٹ پڑی، گرفتار کرنے کا حکم

منی لانڈرنگ کیس تو ہوا ختم، ایم کیو ایم پر نئی قیامت پھوٹ پڑی، گرفتار کرنے کا حکم

کراچی ( پرائم نیوز) انسداد دہشت گردی کی عدالت نے اشتعال انگیز تقریر کیس میں بانی ایم کیو ایم، فاروق ستار، خالد مقبول صدیقی اور ریحان ہاشمی سمیت دیگر ایم کیو ایم رہنماؤں کے ایک بار پھر ناقابل وارنٹ گرفتاری جاری کر دیے ہیں. انسداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت میں اشتعال انگیز تقاریر کے بارے میں مقدمات کی سماعت ہوئی جس میں وسیم اختر کے وکیل نے کہا ہے کہ بانی ایم کیو ایم الطاف حسین نے ملک دشمن تقریر کی تو پارٹی نےانہیں نکال دیا جبکہ مقدمے میں فاروق ستار اور خالد مقبول سمیت پارٹی سینئر رہنما نامزد ہیں لیکن دیگر ملزمان باہر اور وسیم اختر جیل کے اندر ہیں.

عدالت نے وسیم اختر کے وکیل سے استفسار کیا کہ آپکو ان کی آزادی پر اعتراض ہے، آپ چاہتے ہیں کہ وہ بھی پکڑے جائیں؟ جس کے جواب میں وکیل کا کہنا ہے کہ انہیں اعتراض دیگر رہنماؤں کی عدم گرفتاری پر نہیں بلکہ وسیم اسختر کے اندر رہنےپر ہے. عدالت نے ایم کیو ایم بانی، فاروق ستار، خالد مقبول صدیقی، ریحان ہاشمی سمیت دیگر رہنماؤں کے خلاف ایک بار پھر نا قابل ضمانت وارنٹ جاری کرتے ہوئے ملزمان کو گرفتار کر کے 12 نومبر کو پیش کرنے کا حکم دیا ہے جبکہ عدالت نے میئرکراچی وسیم اختر کی ایک مقدمے میں ضمانت کی درخواست پر فیصلہ بھی محفوظ کر لیا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں