1

’’عمران خان اس بار بہت زیادہ تیاری کے ساتھ آ رہے ہیں، ان کو لائٹ نہ لیا جائے‘‘سینئر تجزیہ نگار نے دھماکہ خیز انکشافات کر دیے

’’عمران خان اس بار بہت زیادہ تیاری کے ساتھ آ رہے ہیں، ان کو لائٹ نہ لیا جائے‘‘ سینئر تجزیہ نگار نے دھماکہ خیز انکشافات کر دیے

اسلام‌ آباد ( پرائم نیوز) نجی ٹی وی پروگرام میں سینئر تجزیہ نگار کے حیرت انگیز انکشافات سامنے‌آئے ہیں. نجی ٹی وی پروگرام سے بات کرتے ہوئے تجزیہ نگار کا کہنا ہے کہ 30 اکتوبر کو اتوار ہے جس دن اسلام آباد پہلے ہی سے بند ہو گا لیکن یہ نہ سمجھنا کہ عمران خان اسلام آباد کو صرف ایک دن کیلئے بند کرنے جا رہے ہیں. سینئر تجزیہ نگار کا کہنا ہے کہ عمران خان نے بڑی وضاحت سے یہ بیان دیا ہے کہ جب تک نواز شریف استعفیٰ نہیں دے دیتے تب تک وہ اسلام آباد سے واپس نہیں جائیں گے.سینئر تجزیہ نگار حامد میر نے بتایا ہے کہ میری اطلاعات کے مطابق عمران خان نے اپنے تمام رہنماؤں کو آگاہ کر دیا ہے کہ وہ لوگ جو ساتھ لائیں گے، ان کا 4،5 دن کا راشن ساتھ لے کر آئیں.

حامد میر کا کہنا ہے کہ عمران‌ خان نے یہ اپنی سیاسی زندگی کا سب سے بڑا جواء کھیلا ہے. عمران خان کے پاس واپسی کا راستہ نہیں ہے. حامد میر نے کہا ہے کہ عمران خان نے صرف یہ اعلان نہیں کیا کہ وہ وہ استعفیٰ کے بغیر واپس جائیں گے بلکہ انہوں نے یہ بھی کہا ہے کہ جب تک ان کا مطالبہ پورا نہیں ہو جاتا، جب تک وہ اپنے مقصد تک نہیں‌ پہنچ جاتے، پی ٹی آئی کا کوئی رکن پارلیمنٹ میں نہیں جائے گا. سینئر تجزیہ نگار نے انکشاف کیا ہے کہ اس صورتحال کا موازنہ 2014 کی صورتحال سے کیا جائے تو یہ بہت مختلف ہے. 2014ء میں عمران خان اکیلے تھے اور اس بار ان کے ساتھ بہت لوگ اورجماعتیں ہیں.

حامد میر کا مزید کہنا ہے کہ پچھلی بار پیپلز پارٹی اور دیگر جماعتیں حکومت کے ساتھ کھڑی تھیں لیکن اس بار وہ حکومت کے ساتھ نہیں ہیں. حامد میر نے دعویٰ کیا ہے کہ اس بار موسم ایسا نہیں ہے کہ زیادہ دن تک بیٹھا جائے لیکن عمران خان کچھ نہیں کر سکتے ہیں. عمران خان اس بار بہت زیادہ تیاری کے ساتھ آ رہے ہیں. عمران خان کو لائٹ نہ لیا جائے اور بد قسمتی سے حکومت عمران خان کو سیریس نہیں لے رہی.

اپنا تبصرہ بھیجیں