1

چین بھارت کے ساتھ مل کھڑا ہوا… دونوں ممالک نے مل کر ایسا اقدام اٹھایا کہ جسے جان کر ہر کوئی ششدر رہ جائے

چین بھارت کے ساتھ مل کھڑا ہوا… دونوں ممالک نے مل کر ایسا اقدام اٹھایا کہ جسے جان کر ہر کوئی ششدر رہ جائے

اسلام آباد ( پرائم نیوز) چین اور بھارت نے اکتوبر کے دوران ملک کرفوجی مشقیں کرنے کا فیصلہ کرلیا ہے. انٹرنیشنل بزنس ٹائمز کا کہنا ہے کہ پاک روس مشترکہ فوجی مشقوں کے بعد بھارت نے چین کے ساتھ دفاعی شعبے میں تعلقات کو خوشگوار بنانا شروع کر دیا ہے اور اس ماہ کے دوران مشرقی لداخ کے علاقے میں مشترکہ فوجی مشقیں کرنے کا اعلان کر دیا ہے. اس سے پہلے فروری میں بھی دونوں ممالک کی فوجوں نے مشترکہ مشقیں‌ کی تھیں البتہ 2015ء کے دوران چین میں بھی اسی قسم کی مشقیں منعقد کی جا چکی ہیں.

ذرائع کے مطابق چین اور بھارت کی مشترکہ فوجی مشقوں کا مقصد خطے میں امن پیدا کرنا ہے. دونوں ممالک دنیا کے تیز ترقی کرنے والے معاشی ممالک کی فہرست میں شامل کیے جاتے ہیں تاہم 2013ء میں دونوں ملکوں کے بارڈر کمانڈروں کے درمیان ہاٹ لائن قائم کرنے پر اتفاق ہوا تھا جس کا مقصد بارڈر پر ہونے والی بلا اشتعال فائرنگ کے خطرے کو کم کرنا تھا. ذرائع نے کہا ہے کہ پچھلے دنوں اس حوالے سے مودی سرکار کے نیشنل سیکیورٹی ایڈوائزر اور بھارت میں چینی سفیر کے درمیان نئی دہلی میں ملاقات ہوئی تھی.

خیال رہے کہ یہ خبریں اس وقت موصول ہوئی ہیں جب بھارت کا جنگی جنون عروج پر جا رہا تھا اور تازہ ترین خبروں کے مطابق بھارت بڑے پیمانہ پر جنگ کی‌ تیاریوں میں مشغول ہے. رپورٹس میں بتایا گیا ہے کہ بھارتی ریاست راجستھان میں بھارتی افواج کی تیاریوں میں روز بروز اضافہ ہوتا دکھائی دے رہا ہے. اطلاعات کے مطابق بدھ کے دن بھارتی فوج کی ٹینک کے میزائل بٹالین کو ریاست کے سرحدی علاقوں میں اتار دیا گیا ہے. اطلاع میں بتایا گیا ہے کہ میزائل برادر ٹینکوں کی تعداد 200 کے قریب ہے. جسلمیربارڈ میر کے علاقوں میں بھارتی افواج نے اپنے ذخیروں کو محفوظ بنانے کیلئے زیرزمین سیف ہاؤسز کی نگرانی کا کام اسپیشل کمانڈوز کے حوالے کر دیا ہے اور کہا ہے کہ راجستھان کے 22 سرحدی علاقوں کو خالی کرا لیا گیا ہے. 2 ہزار سے زائد خندقوں کو جو مورچوں کے طور پر استعمال میں لائی جائیں گی، تیار کر لیا گیا ہے. راجستھان میں آئندہ کچھ روز میں ایک لاکھ سے زائد فوج کو لایا جائے گا اس کے علاوہ باڑ میر پر راج باہینی کو لگادیا جائے گا اور کہا گیا ہے کہ جام نگر اور کچھ علاقوں میں بھارتی نیوی کی سرگرمیوں کی بھی خبریں گردش کر رہی ہیں. راجستھان کے علاقوں میں بھارتی آرمی نیوی اور ایئر فورس کے مشترکہ آپریشن برائے راجستھان کو تشکیل دیا گیا ہے. یہ بھی پتا چلا ہے کہ گنگا نگرمیں کنال کو اپ ڈیٹ کر دیا گیا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں