1

سونے کی کار چلانے والا پاکستانی نوجوان، کار ضبط ہونے کے باوجود ایسا قابل تحسین بیان کہ جان کر آپ بھی داد دیں گے

سونے کی کار چلانے والا پاکستانی نوجوان، کار ضبط ہونے کے باوجود ایسا قابل تحسین بیان کہ جان کر آپ بھی داد دیں گے

لندن ( پرائم نیوز) برطانیہ میں پاکستانی ارب پتی نوجوان کی سونے کی کار پچھلے ہفتے لندن میں پولیس نے اپنے قبضے میں لے لی ہے. جب نوجوان سے کار ضبط کی گئی تب وہ اپنی کار مسراٹی کو کنگسٹن سے گرین کیبریو لے جا رہے تھے.

کنگسٹن پولیس نے کہا ہے کہ بورو کے علاقے میں انشورنس کے بغیر گاڑی چلانے والوں کو کوئی رعایت نہیں دی جاتی اور اس پرسخت ترین جرمانہ عائد کیا جاتا ہے جبکہ اس سے پہلے بھی اپریل میں نوجوان پر پارکنگ ٹکٹ ادا نہ کرنے پر جرمانہ عائد کیا گیا تھا.

نوجوان حمزہ شیخ ریجنٹ یونیورسٹی میں بزنس کی تعلیم حاصل کر رہے ہیں اور پراپرٹی کا کام بھی کرتے ہیں. انہوں نے کہا ہے کہ میرے سٹاف نے بتایا کہ پولیس ایک گھنٹےسے میری گاڑی کو دیکھ رہی تھی. حمزہ کا کہنا ہے کہ جب پولیس نے مجھے روکا تو اس وقت میں اپنا تھیوری ٹیسٹ مکمل کر چکا تھا، میں تعلیم اور کاروبار میں مصروف تھا اور جب انشورنس کمپنی کی طرف سے مجھے کوائف جمع کرنے کے بارے میں ایک خط بھیجا گیا تو وہ مجھے نہ مل سکا اور غلطی کی وجہ بھی یہی ہے.

حمزہ کا مزید کہنا ہے کہ میں ارب پتی ہوں اور میرے میسراٹی کار چلانے سے کئی لوگ جلتے ہیں، اگر میری پاس رقم ہے تو میں یہ کار کیوں نہ چلاؤں کیونکہ یہ سب اللہ کا فضل اور میری ماں کی دعاؤں کا پھل ہے، جلن اور حسد دماغی کینسر ہے جو اس کینسر کا شکار ہے اسے چاہیئے کہ اپنا علاج کروائے. حمزہ نے کہا ہے کہ میں اپنے خاندان کا ’’ سنہرا بچہ‘‘ ہوں اس لیے میری کاریں بھی سنہری ہوتی ہیں.

اپنا تبصرہ بھیجیں