2

ایم کیو ایم کی گرفتاریوں کے بعد عمران خان اور طاہرالقادری کو بھی گرفتار کرنے کا حکم، عدالت نے فیصلہ سنا دیا

ایم کیو ایم کی گرفتاریوں کے بعد عمران خان اور طاہرالقادری کو بھی گرفتار کرنے کا حکم، عدالت نے فیصلہ سنا دیا

اسلام آباد ( پرائم نیوز) انداد دہشت گردی کی خصوصی عدالت کے جج سید کوثر عباس زیدی نے پارلیمنٹ اور پی ٹی وی سمیت دوسری سرکاری عمارتوں پر حملہ کے مقدمہ میں پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان اور پاکستان عوامی تحریک کے قائد ڈاکٹر طاہرالقادری سمیت 50 ملزمان کے ورانٹ گرفتاری جاری کر دیے اورانہیں گرفتار کرنے کا حکم دے دیا ہے. سوموار کے دن عدالت میں سماعت کے موقع پر پولیس کی طرف سے پی ٹی آئی کے چیئرمین عمران خان اور عوامی تحریک کے قائد طاہرالقادری سمیت دیگرملزمان کے ورانٹ گرفتاری کی تعمیلی رپورٹ پیش نہ کی گئی جس پر عدالت نے برہمی اظہارکیا ہے.

عدالت کی طرف سے غیرحاضرتمام ملزمان کو گرفتارکر کے پیش کرنے کا حکم دیا گیا اور اس کی سماعت 26 ستمبر تک ملتوی کر دی گئی ہے. جبکہ عدالت نے 7 حاضرملزمان کی طرف سے دائر حاضرسے استثنیٰ کی درخواست بھی قبول کرلی ہے. خیال رہے کہ دھرنوں کے دوران پارلیمنٹ ہاؤس اور پی ٹی وی سمیت دوسری سرکاری عمارتوں پر حملہ کرنے، کارسرکارمیں مداخلت، تھوڑ پھوڑ اور انسداد دہشتگردی ایکٹ الزام میں تھانہ سیکرٹریٹ پولیس نے عمران خان اور ڈاکٹر طاہرالقادری سمیت دیگر ملزمان کے خلاف مقدمہ درج کرنے کے بعد کاروائی کا آغاز کر دیا ہے.

اپنا تبصرہ بھیجیں