10

کوئٹہ ہسپتال میں خوفناک دھماکہ، بڑی تعداد میں جانی نقصان ہو گیا

کوئٹہ ہسپتال میں خوفناک دھماکہ، بڑی تعداد میں جانی نقصان ہو گیا

اسلام آباد ( پرائم نیوز) سول ہسپتال کوئٹہ میں دھماکے سے 53 افراد جاں‌ بحق اور 60 سے زائد زخمی ہو گئے. زخمیوں میں بلوچستان بار کے سابق صدر تاج محمد کاکڑ بھی شامل ہیں. دھماکہ اس قدر شدید تھا کہ اس کی آواز دور تک سنائی دی تھی، دھماکے کے بعد فائرنگ بھی کی گئی. دھماکے کے بعد ہسپتال میں بگھدڑ مچ گئی اور ہسپتال میں ایمر جنسی نافذ کر دی گئی.

ذرائع کا کہنا ہے کہ دھما کہ ہسپتال کے شعبہ حادثات کے بیرونی دروازے پر ہوا، جہاں‌ وکلا کی بڑی تعداد جمع تھی. سیکیورٹی اور ریکسیو ذرائع موقع پر پہنچ گئے اور امدادی کاروائیوں کا آغاز کر دیا گیا. دھماکے میں کئی وکلا زخمی ہو گئے جن میں سے کئی زخمیوں کی حالت تشویشاناک ہے.

دوسری جانب کوئٹہ میں منو جان روڈ پر بلوچستان ایسوسی ایشن کے صدر کو قتل کر دیا گیا. پولیس کا کہنا ہے کہ بلال انور کاسی پر نامعلوم افراد نے فائرنگ کی. ان کی میت سول ہسپتال میں منتقل کر دی گئی جس کی وجہ سے سول ہسپتال میں وکلا کی بڑی تعداد موجود تھی جو دھماکے کا نشانہ بنی.

اپنا تبصرہ بھیجیں