4

سلمان خان بارے بڑی خبرآ گئی، عدالت نے زبردست فیصلے کا اعلان کر دیا

سلمان خان بارے بڑی خبرآ گئی، عدالت نے زبردست فیصلے کا اعلان کر دیا

راجھستان ہائیکورٹ نے بالی ووڈ سلمان خان کو کالا ہرن اور چنکارہ ہرن کے غیرقانونی شکار کے 2 مختلف مقدمات سے بری کر دیا ہے. راجھستان ہائیکورٹ نے سلمان خان کو با عزت بری کرتے ہوئے اپنے فیصلے میں کہا ہے کہ اس واقعے کے کوئی ٹھوس شواہد نہیں ملے کہ جو نایاب ہرن مردہ پائے گئے تھے انہیں سلمان خان نے ہی مارا تھا. ان کیسوں کے ماتحت عدالت نے سلمان خان کو5 سال قید کی سزا سنائی تھی.

سلمان خان پر الزام لگایا گیا تھا کہ انہوں نے جودھ پور کے قریب 1 اور 2 اکتوبر1998 کی درمیانی شب میں 2 نایاب ہرنوں کا شکار کیا تھا تاہم ان پر آرمز ایکٹ کے تحت مقدمہ درج کیا گیا تھا کیونکہ محکمہ جنگلات نے الزام لگایا تھا کہ سلمان خان نے جس بندوق کے ساتھ شکار کیا تھا اس کے لائسنس کی معیاد ختم ہو چکی تھی.

سلمان خان نے ماتحت عدالت کے فیصلے کے خلاف ہائیکورٹ میں اپیل کی تھی جس کی سماعت مئی کے آخری ہفتے میں مکمل ہونے پر عدالت نے محفوظ کر لیا تھا.پیر کو جودھ پور میں ہائیکورٹ نے ان کیسوں کا فیصلہ سناتے ہوئے سلمان خان کوبری کر دیا تھا.

واضح رہے کہ 1992ء میں فلم ہم ساتھ ساتھ میں کی شوٹنگ کے دوران سلمان خان اور دیگر 7 افراد پر کالا ہرن اور چنکارہ ہرن کے غیر قانونی شکار کا الزام لگایا گیا تھا.

اپنا تبصرہ بھیجیں